Voice of Asia News

بھارت،بی جے پی لیڈر کے خلاف شکایت درج کرانے پر خاتون وکیل پر سرعام تشدد

نئی دہلی (وائس آ ف ایشیا) ہندوتوا قوتوں کی طرف سے بڑھتے ہوئے عدم برداشت سے متاثرہ مودی کا بھارت سماج کے کمزور طبقوں کے لیے اتنا غیر محفوظ ہو گیا ہے کہ خواتین وکلا ء کو بھی نہیں بخشا جاتا اور ملک کے کسی بھی حصے میں انہیں بغیر کسی وجہ کے سڑکوں پر لاتوں، تھپڑوں اور بد تمیزی کا نشانہ بنایا جاتا ہے۔کشمیر میڈیا سروس کے مطابق ایسے ہی ایک تازہ واقعے میں سوشل میڈیا پر گردش کرنے والی ایک ویڈیو میں بھارتی ریاست کرناٹک میں ایک شخص کو خاتون وکیل کے ساتھ بدتمیزی کرتے ہوئے دیکھا جاسکتا ہے۔ویڈیو میں ایڈوکیٹ سنگیتا شکیری پر اس کا پڑوسی مہنتیش حملہ کرتے ہوئے نظر آ رہا ہے۔دکن ہیرالڈ کی ایک رپورٹ کے مطابق اگرچہ اس کے شوہر نے لوگوں سے مدد کی درخواست کی لیکن کوئی اسے بچانے کے لیے نہیں آیا۔سنگیتا نے کہا کہ یہ حملہ اس شکایت کی وجہ سے کیا گیا جو انہوں نے جائیداد کے تنازعے پر ہراساں کرنے پر باگل کوٹ کے بی جے پی کے جنرل سیکریٹری راجو نائکر کے خلاف درج کرائی تھی۔پولیس نے مہنتیش کو خاتون پر حملہ کرنے کے الزام میں گرفتار کر لیا ۔

image_pdfimage_print
شیئرکریں