Breaking News
Voice of Asia News

شیرانی گروپ کا پی ٹی آئی کے ساتھ مذہبی سیاسی اتحاد کا اعلان

پشاور(وائس آ ف ایشیاء) چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان سے مولانا شیرانی نے ملاقات کی، شیرانی گروپ نے پی ٹی آئی کے ساتھ مذہبی سیاسی اتحاد کا اعلان کردیا ہے، جے یوآئی شیرانی کے 25 رکنی گروپ نے ساتھ چلنے کی یقین دہانی کرائی۔ جے یوآئی شیرانی گروپ کے مولانا شیرانی کی قیادت میں وفد نے خیبرپختونخواہ ہاؤس میں چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان سے ملاقات کی، جس میں ملک کی سیاسی اورمذہبی صورتحال پر بات چیت کی گئی۔ اس موقع پر جے یوآئی شیرانی گروپ اور پی ٹی آئی نے مستقبل میں مل کرچلنے پر اتفاق کیا۔ شیرانی گروپ نے تحریک انصاف کے ساتھ مذہبی سیاسی اتحاد کا اعلان کیا ہے۔چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان نے شیرانی گروپ کے پی ٹی آئی کے ساتھ اتحاد کا خیرمقدم کیا۔ دوسری جانب پی ٹی آئی کے ممکنہ لانگ مارچ کو روکنے کیلئے سپریم کورٹ میں درخواست دائر کر دی گئی ۔ اصغر علی شیخ نامی شہری کی طرف سے دائر کی گئی درخواست میں موقف اپنایا گیا ہے کہ سابق وزیر اعظم عمران خان کا لانگ مارچ کرنے کا مقصد ملک میں افراتفری پھیلانا ہے،پی ٹی آئی ٹائیگر فورس کو تنخواہ دی جارہی ہے تاکہ وہ ملک کو نقصان پہنچائے ،عمران خان سمیت تحریک انصاف کے رہنما مختلف ٹی وی چینلز پر کہہ چکے ہیں ہمارا مارچ خونی ہوگا،عمران خان نے ایک انٹرویو میں کہا ملک تین حصوں میں تقسیم ہوگا اور ایٹمی اثاثے خطرے میں ہیں،سابق وزیر اعظم عمران خان ٹائیگر فورس کو حالیہ حکومت کے خلاف استعمال کرسکتے ہیں،سابق وزیر داخلہ شیخ رشید احمد مختلف سیاسی جلسوں میں ملکی اداروں کو دھمکا رہے ہیں،شیخ رشید عوام کو ملکی اداروں پر حملے کیلئے اکسا رہے ہیں۔ درخواست میں عدالت عظمیٰ سے استدعا کی گئی ہے کہ سپریم کورٹ عمران خان سمیت پی ٹی آئی کے دیگر رہنماؤں کے غیر قانونی اقدامات کے خلاف جے آئی ٹی تشکیل دینے سمیت ٹائیگر فورس کو تنخواہوں کی ادائیگی پر ایف آئی اے سے انکوائری کراتے ہوئے ملک میں پرامن ماحول برقرار رکھنے کیلئے پی ٹی آئی کے خونی مارچ کو روکنے کا حکم جاری کرے۔درخواست میں سابق وزیراعظم عمران خان، شیخ رشید، شاہ محمود قریشی اور فواد چوہدری سمیت دیگر کو فریق بنایا گیا ہے۔

مولانا شیرانی کا 25 مرکزی اور صوبائی رہنما ارکان کے ساتھ عمران خان سے اتحاد کا فیصلہ

اسلام آباد (وائس آ ف ایشیاء) جمیعت علمائے اسلام شیرانی اور پی ٹی آئی میں اتحاد کو کوحتمی شکل دے دی گئی، مولانا محمد خان شیرانی پی ٹی آئی چئرمین عمران خان کی مشترکہ پریس کانفرنس میں اتحاد کا باضابطہ اعلان کیا جائے گا۔ تفصیلات کے مطابق جمیعت علمائے اسلام ف کے 25 رکنی گروپ نے تحریک انصاف سے اتحاد کرلیا ، جے یو آئی شیرانی اور پی ٹی آئی میں اتحاد کو کوحتمی شکل دے دی گئی۔ مولانا شیرانی سمیت 25 ارکان آج عمران خان سےملاقات کریں گے ، ملاقات کرنیوالوں جےیوآئی مرکزی اور صوبائی رہنماشریک ہوں گے۔ عمران خان سے ملاقات میں وفد کی قیادت مولاناشیرانی کریں گے جبکہ مولانا گل نصیب ،مولانا شجاع الملک بھی ملاقات میں موجود ہوں گے۔ ملاقات میں سیاسی و مذہبی اتحاد کا اعلان کیا جائے گا ، اس حوالے سے پی ٹی آئی اور جے یو آئی شیرانی گروپ میں اتحاد کیلئے مجوزہ ڈرافٹ تیار کرلیا ہے۔ دونوں گروپس میں اتحاد میں حلیم عادل شیخ نے اہم کردار ادا کیا ۔ عمران خان کی ہدایت پرحلیم عادل شیخ نے مولاناشیرانی سے ملاقات کی، جس میں مولانا شیرانی اور دیگر ارکان نےعمران خان کا ساتھ دینے پر اتفاق کیا۔ جمیعت علمائے اسلام کے سینئر رہنما مولانا شیرانی نے اپنے ٹوئٹ میں تحریک انصاف سے سیاسی اتحاد کی تصدیق بھی کر دی۔

image_pdfimage_print
شیئرکریں