Voice of Asia News

اسرائیل کو ایران پر حملوں سے نہیں روکا، امریکی اہلکار

واشنگٹن(وائس آ ف ایشیاء) امریکی صدرجو بائیڈن پرمشرق وسطی میں امریکا کے اہم اتحادیوں کی طرف سے دبائو بڑھ رہا ہے کہ وہ ایران کے جوہری عزائم کو روکنے کے لیے ایک قابل عمل منصوبہ تیار کریں کیونکہ 2015 کے جوہری معاہدے کی بحالی کی امیدیں معدوم ہو جاتی جا رہی کیونکہ بائیڈن بطور صدرآئندہ ماہ سعودی عرب اور اسرائیل کے لیے اپنے پہلے دورے کی تیاری کر رہے ہیں۔ میڈیارپورٹس کے مطابق امریکی انتظامیہ کے ایک سینئر اہلکار نے کہا کہ ایران کے ساتھ حالات گرم ہو رہے ہیں۔ انہوں نے ایران کی طرف سے جوہری نگرانی کے کیمرے ہٹانے اور ایران کے خلاف اسرائیل کے خفیہ اور جارحانہ اسرائیلی کارروائیوں کے سلسلے کا حوالہ دیا۔بات چیت سے واقف ذرائع نے بتایا کہ امریکی انتظامیہ نے کہا ہے کہ وہ ایران پر اقتصادی دبائو برقرار رکھے گی اور اگر معاہدہ ناکام ہوتا ہے تو پابندیوں کے نفاذ کو تیز کیا جائے گا۔ امریکا ایران کے خلاف ایک علاقائی اتحاد بنانے کے لیے بھی کام کر رہا ہے، خلیجی ریاستوں پر زور دے رہا ہے کہ وہ ایرانی حملوں کے خلاف اپنے تمام فضائی اور میزائل دفاعی نظام کو مربوط کریں۔

image_pdfimage_print
شیئرکریں