Voice of Asia News

سابق حکومتی عہدیداران اور سیاستدانوں کی سکیورٹی کو یقینی بنانے کے لیے پرعزم ہے، افغان وزیر خارجہ

کابل (وائس آ ف ایشیاء) افغانستان کے وزیر خارجہ امیر خان متقی نے کہا ہے کہ حکومت اپنے وطن واپس آنے والے سابق حکومتی عہدیداران اور سیاستدانوں کی سکیورٹی کو یقینی بنانے کے لیے پرعزم ہے۔ افغان میڈیا کے مطابق انہوں نے افغانستان واپس آنے والی بعض شخصیات کے ساتھ گزشتہ روز ملاقات کے دوران زور دیا کہ افغانستان تمام افغان شہریوں کا مشترکہ گھر ہے اور ہمیں امید ہے کہ تمام افغان شہری اپنے ملک واپس لوٹیں گے۔ انہوں نے کہا کہ یہ وقت تمام اختلافات کو بالائے طاق رکھتے ہوئے سب کو معاف کرنے کا ہے اور ہم نے جو بھی وعدے کیے انہیں پورا کرنے کا وقت ہے۔ انہوں نے کہا کہ اگر کوئی بھی افغان شہری چاہے وہ سیاست دان ہے یا عام شہری اس کے تحفظ کو یقینی بنانا ہو گا۔ انہوں نے کہا کہ ملک میں خون ریزی کا جواب خون ریزی سے نہیں دیا جا سکتا بلکہ بات چیت اور صلح رحمی سے امن قائم کیا جا سکتا ہے اور تمام تنازعات کا حل نکالا جا سکتا ہے۔ انہوں نے زور دیا کہ افغان شہریوں میں اعتماد سازی کو فروغ دینے کی ضرورت ہے۔ انہوں نے کہا کہ مخالفین افغان حکومت کے سسٹم کو سراہتے ہیں لیکن واپس آنے والے افغان شہریوں کو غدار اور کرپٹ کہا جاتا ہے تاہم ہمیں اتنا معلوم ہے کہ ہمارے دشمنوں اور مخالفین کی سب سے بڑی سازش کی وجہ یہی ہے کہ افغان شہری متحد نہیں ہیں۔ افغان وزیر خارجہ نے کہا کہ عام معافی ( amnesty decree )کے بعد اگر کوئی جرم کا ارتکاب کرتا ہے تو اس کا احتساب کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ ملک کی سیاسی اور اقتصادی صورتحال میں بہتری آرہی ہے۔

image_pdfimage_print
شیئرکریں