Voice of Asia News

امریکی کامیڈین پر 16سالہ لڑکی کیساتھ زیادتی پر5 لاکھ ڈالر ہرجانہ

کیلی فورنیا (وائس آ ف ایشیاء)امریکا کی ایک عدالت نے معروف کامیڈین بل کاسبی کو 1975 میں نوعمر لڑکی کو جنسی زیادتی کا نشانہ بنانے پر 5 لاکھ ڈالر ہرجانے کی سزا سنائی ہے۔ ریاست کیلی فورنیا کی ایک عدالت نے امریکا میں باوقار باپ اور باوفا شوہر کے کردار کے لیے مشہور 84 سالہ مزاحیہ اداکار بل کاسبی کو جنسی زیادتی کا کیس ثابت ہونے پر متاثرہ خاتون کو 5 لاکھ ڈالر ہرجانہ ادا کرنے کا حکم دیا ہے۔ عدالت نے فیصلے میں لکھا کہ بل کوسبی نے یہ جانتے ہوئے بھی کہ لڑکی کی عمر 18 سال سے کم ہے، اس کے ساتھ جنسی تعلق بنایا اور یہ طرز عمل ایک نابالغ لڑکی میں غیر فطری یا غیر معمولی جنسی دلچسپی کی وجہ کا باعث بنا۔ اس کیس کی گواہ، متاثرہ لڑکی جوڈی ہتھ کی دوست ڈونا سیموئیلسن تھیں جنھوں نے عدالت میں ہتھ اور کوسبی کی تصاویر پیش کیں اور گواہی دی کہ پلے مینشن میں کس طرح بل کوسبی نے نوعمر لڑکی کو زیادتی کا نشانہ بنایا۔ خیال رہے کہ بل کوسبی پر 1975 میں ایک 16 سالہ لڑکی جوڈی ہتھ کو پلے بوائے مینشن جنسی میں زیادتی کا نشانہ بنانے کا الزام تھا۔ جوڈی ہتھ کی اِس وقت عمر 64 سال ہے اور 7 سال کی طویل قانونی جنگ کے بعد انھیں فتح حاصل ہوئی۔ امریکا میں اپنے کرداروں کے باعث باپ کا درجہ رکھنے والے بل کوسبی کے خلاف جنسی زیادتی کا فیصلہ اُس وقت آیا ہے جب وہ ایک سال قبل ہی پنسلوانیا میں جنسی زیادتی کے کیس میں دو سال کی قید کے بعد رہا ہوئے ہیں۔ پنسلوانیا کی عدالت کا کہنا تھا کہ بل کوسبی نے متاثرہ خاندان سے تصفیہ کرلیا ہے اس لیے 10 سال کی قید کو ختم کرکے ملزم کو رہا کرنے کا حکم دیا جاتا ہے۔ یاد رہے کہ پانچ دہائیوں کے دوران 50 سے زائد خواتین کی جانب سے بل کوسبی پر جنسی حملوں کے الزامات کے بعد ان کے ایک اچھے شوہر اور باپ ہونے کی ساکھ کو شدید نقصان پہنچا ہے اور ان کے مداح حیران ہیں۔

image_pdfimage_print
شیئرکریں